کرپٹ مافیا ہمارا سب سے بڑا دشمن ہے، عمران خان

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے اسلام آباد میں پرفارمنس ایگریمنٹ پر دستخط کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا ضروری ہے ہم اپنی حکومت کے آخری دو سال اہداف مقرر کرکے ان کا سہہ ماہی جائزہ لیں۔

عمران خان نے کہا کہ حکومت کے تین سال میں جتنا سیکھا اتنا زندگی میں نہیں سیکھا، کیونکہ سب سے زیادہ مشکل وقت یہ تھا، انسان کا پتہ ہی مشکل وقت میں پتہ چلتا ہے، جو انسان محنت نہیں کرتا وہ ترقی نہیں کرسکتا، اگر آج تھوڑے سے یہودی دنیا میں سب سے طاقتور ہیں اس کی وجہ یہ ہے کہ وہ سب سے زیادہ پڑھے لکھے ہیں، امریکا کی ہر یونی ورسٹی میں یہودی بیٹھے ہیں کیونکہ وہ محنت کرتے ہیں، مشکل وقت میں صبر کرنے سے اگلی مشکل میں بقا کی صلاحیت بڑھ جاتی ہے، حکومت کے تین سال کا زندگی سے موازنہ کرتا ہوں، جتنا تین سال میں سیکھا ہے اتنا زندگی میں کبھی نہیں سیکھا، سب سے مشکل وقت یہی تھا۔

یہ بھی پڑھیں:   پاکستان میں مہنگائی مزید بڑھنے کا امکان ، ایشیائی ترقیاتی بینک

عمران خان کا کہنا تھا کہ ہم سارے مافیا کے سامنے کھڑے ہیں، کرپٹ نظام سے مستفید ہونے والے الیکٹرانک ووٹنگ مشین کی مخالفت کررہے ہیں، ذاتی مفادات والے تبدیلی نہیں چاہتے، ای وی ایم سے ہمیں کیا فائدہ ہے، الیکٹرانک ووٹنگ مشین سے لوگوں کو کیا مسئلہ ہے، اسے متنازع بنایا ہوا ہے، ہر الیکشن میں دھاندلی کی شکایت ہوتی ہے مگر کوئی تجویزنہیں دیتا کیسے مسئلہ دورکریں، کرپٹ مافیا ہمارا سب سے بڑا دشمن ہے، ہمارے سامنے اس سے نمٹنے کا چیلنج ہے۔

یہ بھی پڑھیں:   بھارتی مذموم عزائم کوبے نقاب کرتے رہیں گے، وزیراعظم

وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ آخری دو سال ہمارے اہم ترین ہیں، اس سال ہم محنت کرلیں تو ہم ترقیاتی فنڈز سے نہیں بلکہ حکومتی کارکردگی سے جیتیں گے، خصوصا کے پی، پنجاب، آزاد کشمیر اور گلگلت بلتستان میں، تاہم اصل جنگ اس وقت پنجاب کی ہے، آخر دو سال میں پورا زور لگاکر اہداف کو حاصل کرلیا تو حکومت مزید مضبوط ہوکر آگے جائے گی۔