صومالی وزیراعظم خود کش حملہ، بال بال بچ گئے

Spread the love

موغادیشو: صومالیہ میں وزیراعظم محمد حسین روبلے کی آمد سے زرا دیر پہلے ایک زور دار بم دھماکے میں 15 افراد ہلاک اور 10 زخمی ہوگئے۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق صومالیہ کے وزیراعظم کو بم دھماکے کا نشانہ بنایا گیا، خوش قسمتی سے محمد حسین روبلے محفوظ رہے تاہم اُن کے 3 محافظوں سمیت 15 افراد ہلاک ہوگئے۔ صومالیہ کی سرکاری نیوز ایجنسی سونا نے وزیراعظم پر حملے کی تصدیق کر تے ہوئے بتایا کہ بم دھماکا وزیراعظم کی آمد سے زرا دیر قبل ہوا تھا۔ وزیراعظم محمد حسین روبلے محمد پر حملے کی ذمہ داری شدت پسند گروپ الشباب نے قبول کرلی ہے۔

یہ بھی پڑھیں:   انتہا پسندوں نے دو کشمیریوں پر حملہ کردیا، گالیاں، لاٹھیاں، بدترین تشدد، ویڈیو منظرعام پر آگئی

پولیس کا کہنا ہے کہ خود کش بمبار نے اسٹیڈیم کے اندر داخل ہونے کی کوشش کی ناکامی پر وزیراعظم کے سیکیورٹی اسٹاف کے نزدیک خود کو دھماکے سے اُڑادیا۔ خود کش دھماکا اسٹیڈیم کے باہر کیا گیا جہاں وزیراعظم محمد حسین روبلے نے خطاب کرنے آرہے تھے۔ الشباب صومالیہ میں سرکاری عمارتوں اور افسران کو نشانہ بنانے میں ملوث رہی ہے۔

یہ بھی پڑھیں:   روس کا سرد جنگ میں طے پانے والے جوہری معاہدے سے نکلنے کا باقاعدہ اعلان