اپوزیشن نے قوانین کے بدلے این آر او مانگا، عمران خان

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے انکشاف کیا کہ اپوزیشن نے ایف اے ٹی ایف قوانین کی منظوری کے بدلے لکھ کر این آر او مانگا۔

وزیراعظم عمران خان کی صدارت میں حکومت اور تحریک انصاف کے پارٹی ترجمانوں کا اہم اجلاس ہوا جس میں کابینہ ارکان سمیت پی ٹی آئی کے اہم رہنماؤں نے بھی شرکت کی۔ بابر اعوان نے فنانشل ایکشن ٹاسک فورس سے متعلق قوانین پر اپوزیشن سے مذاکرات سے متعلق بریفنگ دی۔

یہ بھی پڑھیں:   سابق انسپکٹر جنرل سندھ پولیس غلام حیدر جمالی کی گرفتاری،نیب طلب

اس موقع پر وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ حکومت ایف اے ٹی ایف کے قوانین کو قومی فریضہ سمجھتی ہے لیکن اپوزیشن نے ان قوانین کی منظوری کی آڑ میں حکومت سے لکھ کر این آر او مانگا۔ قوم نے جن کو مسترد کیا ہے وہ اپنی چوری چھپانے کی کوشش میں لگے ہوئے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:   نوبل انعام مجھے نہیں اس کو ملنا چاہیے جو مسئلہ کشمیر حل کرے، وزیر اعظم عمران خان

عمران خان کا کہنا تھا کہ ہماری حکومت نے دو سال تک کڑے وقت، مشکلات اور چیلنجز کا سامنا کیا اور حالات پر قابو پانے میں کامیاب ہوگئے ہیں جس کے بعد اب حکومت کی پوری توجہ معیشت کی بحالی پر ہے۔

اجلاس میں ملک کی تازہ سیاسی اور معاشی صورت حال پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا اور اس حوالے سے حکومتی بیانیے پر مشاورت بھی کی گئی مشیر برائے پارلیمانی امور بابر اعوان نے وزیراعظم کو ایف اے ٹی ایف قوانین سے متعلق پیش رفت سے بھی آگاہ کیا۔