حکومت کا ٹرین آپریشن 10 مئی سے جزوی بحال کرنے کا فیصلہ

لاہور: وزیر اعظم عمران خان کی حتمی منظوری کے بعد چاروں صوبوں میں اپ اینڈ ڈاؤن 24 ٹرینیں چلائی جائیں گی۔

میڈیا کے مطابق حکومت نے ٹرین آپریشن 10 مئی سے جزوی بحالی کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور اس حوالے سے وزارت ریلوے نے ٹرین آپریشن بحالی کے لئے پاکستان ریلوے کو مراسلہ جاری کر دیا ہے جس میں ہدایت دی گئی ہے کہ ریلوے حکام ٹرین آپریشن بحالی سے متعلق انتظامات مکمل کرلیں۔

یہ بھی پڑھیں:   شہبازشریف کے اثاثوں میں 10سال میں 70 گنا اضافہ ہوا.

8 مئی کوٹرین آپریشن بحالی سے قبل وزیر اعظم سے حتمی منظوری لی جائے گی، اور وزیر اعظم کی حتمی منظوری کے بعد اپ اینڈ ڈاؤن 24 ٹرینیں چلائی جائیں گی، ابتدائی طور پر چارصوبوں میں ٹرین آپریشن جزوی بحال کیا جائے گا، ممکنہ طور پر لاک ڈاؤن کے بعد بھی ریزرویشن دفاتر بند رہیں گے اور ٹرین آپریشن بحالی پر مسافروں کو صرف آن لائن بکنگ کے ذریعے ہی ٹکٹ دستیاب ہوں گی۔

یہ بھی پڑھیں:   کراچی ٹیسٹ کا دوسرا روز؛ نیوزی لینڈ نے بغیر کسی نقصان 165 رنز بنا لیے

خصوصی ٹرین آپریشن کے آن لائن بکنگ 9 مئی سے شروع ہوگی، ٹرین کی 60 فیصد سیٹیں بک ہونے کے بعد بکنگ روک دی جائے گی، 60 فیصد بکنگ سے سماجی فاصلہ پالیسی پر عملدرآمد کو یقینی بنایا جائے گا، خصوصی ٹرینوں کی بکنگ روانگی سے 24 گھنٹے پہلے بند کردی جائے گی، خصوصی ٹرینیں چلنے کی صورت میں مسافروں کو ٹرین کی روانگی سے 1 گھنٹہ قبل سٹیشن پہنچنا ہوگا، ریلوے اسٹیشن سے 200 میٹر تک ایریا غیر ضروری افراد کے داخلے پربند ہو گی، مسافروں کے پاس اپنے ماسک، گلوز، سینیٹائزر اور صابن ہونا لازم ہے۔

یہ بھی پڑھیں:   چینی قرضے پر سالانہ سود 36.3 ارب تک جاپہنچا

وزارت ریلوے نے خصوصی ٹرین آپریشن کیلئے ایس او پی پر عملدرآمد لازمی قرار دیا ہے، جس کے تحت خصوصی ٹرین آپریشن کے دوران مسافروں اور عملے کے لیے ہدایات پر عمل لازم ہوگا، اور کوتاہی کی صورت میں ریلوے قوانین کے تحت سخت کارروائی کی جائے گی۔