کورونا وائرس کا خطرہ،23 مارچ کی یوم پاکستان پریڈ منسوخ

اسلام آباد: کورونا وائرس کے باعث 23 مارچ کو وفاقی دارالحکومت میں ہونے والی یوم پاکستان پریڈ منسوخ کر دی گئی۔

ہر سال 23 مارچ کو اسلام آباد میں پاکستان کی مسلح افواج، دیگر فورسز اور تمام صوبوں سے تعلق رکھنے والی ٹیمیں اپنے اپنے علاقوں کی نمائندگی کرتی ہیں۔ اس پروقار تقریب میں صدر مملکت، وزیراعظم، وفاقی وزراء، غیر ملکی سفیر اور مندوبین کے علاوہ مسلح افواج کے سربراہان بھی شریک ہوتے ہیں۔ یوم پاکستان کی مناسبت سے ہونے والی تقریب میں پاکستان کے دفاعی سازو سامان کی نمائش بھی کی جاتی ہے اور ملکی ثفاقت کو بھی اجاگر کیا جاتا ہے۔

وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت قومی سلامتی کمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں کورونا وائرس کے خطرے کے پیش نظر 23 مارچ کو یوم پاکستان کی پریڈ منسوخ کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔ وزیراعظم عمران خان کی معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان کا کہنا تھا کہ 23 مارچ کی پریڈ منسوخ کردی گئی ہے۔ اس کے علاوہ قومی سلامتی کمیٹی میں کئی اہم فیصلے کیے گئے جن میں کورونا وائرس کے خطرے کے پیش نظر ایران اور افغانستان کے ساتھ مغربی سرحدیں ابتدائی طور پر 14 روز کیلئے بند کرنے کا فیصلہ کیا گیا۔

یہ بھی پڑھیں:   بائیو میٹرک کے علاوہ بزرگ شہریوں کی تصدیق کے متبادل طریقہ کار ایجاد کر لیا گیا

ملک بھر کے تعلمی ادارے بھی 5 اپریل تک بند کرنے کا بھی فیصلہ کیا گیا۔ خیال رہے کہ آج بھی کورونا وائرس کا ایک مریض کراچی سے سامنے آیا ہے جس کی عمر 52 سال بتائی گئی ہے اور وہ 2 روز قبل اسلام آباد سے کراچی پہنچا تھا۔ یہ کیس سامنے آنے کے بعد ملک میں کیسز کی مجموعی تعداد 22 ہوگئی تھی جن میں سے اب تک سندھ میں کیسز کی تعداد 16، گلگت بلتستان میں 3، اسلام آباد میں 2 جبکہ کوئٹہ میں ایک کیس سامنے آیا ہے تاہم اب معاون خصوصی برائے صحت ڈاکٹر ظفر مرزا نے اچانک کورونا وائرس سے متاثرہ افراد کی تعداد 28 بتادی ہے۔

یہ بھی پڑھیں:   کورونا سے متاثر مریضوں کی تعداد 3000 سے تجاوئز، 59 افراد جاں بحق

کورونا وائرس کے باعث دنیا بھر میں کھیلوں کے ایونٹس اور نمائشیں بھی منسوخ کی جا رہی ہیں۔ جنوبی کوریا میں ہونے والا دنیا سب سے بڑا ٹیلی کام میلہ بھی کورونا وائرس کی وجہ سے منسوخ کر دیا گیا ہے جب کہ امریکا سمیت کئی ممالک میں بڑے اجتماعات پر پابندی عائد کر دی گئی ہے۔ اس کے علاوہ سعودی عرب نے عمرے کی ادائیگی جب کہ ایران نے نماز جمعہ کے اجتماعات پر بھی پابندی عائد کر رکھی ہے۔

یہ بھی پڑھیں:   کورونا وائرس کا ایک اورکیس رپورٹ، پاکستان میں تعداد 21 ہوگئی

واضح رہے کہ گزشتہ برس دسمبر میں چین سے سامنے آنے والا کورونا وائرس اب دنیا کے 127 سے زائد ممالک تک پھیل چکا ہے۔ عالمی ادارہ صحت کورونا وائرس کو عالمگیر وبا قرار دے چکا ہے جس سے اب تک 4 ہزار 900 سے زائد افراد ہلاک اور ایک لاکھ 34 ہزار سے زائد متاثر ہو چکے ہیں۔ اقوام متحدہ نے دنیا کے تمام ممالک پر زور دیا ہے کہ کورونا وائرس سے نمٹنے کے لیے ہنگامی بنیادوں پر اقدامات کیے جائیں۔