محمد عامر اب پاکستانی ٹیم کے ساتھ رہ کر انٹر نیشنل کرکٹ نہیں کھیلے گے بلکہ کس ملک سے کھیلے گے؟ حیران کن دعوی

Spread the love

لاہور(ویب ڈیسک ) سینئر سپورٹس صحافی اور تجزیہ نگار سلیم خالق نے دعوی کیا ہے کہ فاسٹ باﺅلر محمد عامر کو اب پاکستانی ٹیم کے ساتھ رہ کر انٹر نیشنلکرکٹ کھیلنے میں کوئی دلچسپی نہیں رہ گئی ہے اور وہ اب برطانوی شہری بن کر وہیں کھیلنا چاہتے ہیں ۔ایک انٹرویو کے دوران سلیم خالق کا کہنا تھا کہ محمد عامر کو اب صرف کسی بھی انگلش کاﺅنٹی سے فل سیزن کانٹریکٹ کی تلاش ہے،

یہ بھی پڑھیں:   آسٹریلیا اور پاکستان کے درمیان دوسرا ٹی ٹونٹی کرکٹ میچ کب کھیلا جائیگا؟ تاریخ سامنے آگئی

انہوں نے ایک برطانوی خاتون کے ساتھ شادی کررکھی ہے اور برطانوی شہریت کے لیے کاغذات بھی جمع کروارکھے ہیں جس کے بعد اب انہیں صرف وہاں سے جواب ملنے کا انتظار ہے ۔سلیم خالق کا مزید کہنا تھا کہ محمد عامر کا پہلا منصوبہ یہ تھا کہ کسی طرح انگلینڈ کا ویزہ دوبارہ لگوایا جایا کیوں کہ وہ برطانیہ میں جیل میں رہ چکے ہیں اور عمومی طور پر اس کے بعد ویزہ لگوانا بہت مشکل ہوتا ہے تاہم انہیں ویزہ مل گیا اور وہ پاکستانی ٹیم کے ساتھ انگلینڈ گئے اور یوں ایک بڑی رکاوٹ ختم ہوگئی جس کے بعد انہوں نے شادی کرلی اور پھر برطانوی شہریت کے لیے درخواست دیدی تاہم ابھی ان کا کیس چل رہا ہے،جیسے ہی محمد عامر کو برطانوی شہریت ملے گی تو وہ پاکستانی کرکٹ چھوڑ کر مستقل طور پر برطانیہ منتقل ہوجائیں گے اور وہیں کاﺅنٹی کرکٹ اور کلبکرکٹ کھیلیں گے ۔

یہ بھی پڑھیں:   پاکستان کو پہلی بار کبڈی ورلڈ کپ کی میزبانی مل گئی

یاد رہے کہ محمد عامر نے2017ءمیں ایسیکس کاﺅنٹی کے لیے مجموعی طور پر28وکٹیں حاصل کی تھیں اور رواں سال بھی انگلش ٹی ٹونٹی بلاسٹ کے 8میچز میں ایسیکس کی نمائندگی کریں گے۔ مستقل طور پر برطانیہ منتقل ہوجائیں گے اور وہیں کاﺅنٹی کرکٹ اور کلبکرکٹ کھیلیں گے ۔یاد رہے کہ محمد عامر نے2017ءمیں ایسیکس کاﺅنٹی کے لیے مجموعی طور پر28وکٹیں حاصل کی تھیں اور رواں سال بھی انگلش ٹی ٹونٹی بلاسٹ کے 8میچز میں ایسیکس کی نمائندگی کریں گے۔

یہ بھی پڑھیں:   قومی کرکٹ ٹیم کی کینبرا آمد، عشائیے میں شرکت