پاکستان میں کارپوریٹ گورننس میں بہتری آگئی، ورلڈ بینک

اسلام آباد(ویب ڈیسک)ورلڈ بینک کی رپورٹ کے مطابق پاکستان میں کارپوریٹ گورننس میں بہتری آگئی ہے۔ ورلڈ بینک کے کنٹری ڈائریکٹر الانگو پاچا میتھو نے اسلام آباد میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان میں کارپوریٹ گورننس (تجارتی طرز حکمرانی) میں بہتری آئی ہے،

پاکستان کاروبار میں آسانیوں کے سلسلے میں 147 سے 137 ویں نمبر پر آگیا ہے، پاکستان کی معاشی ترقی میں نجی شعبہ کا کلیدی کردار ہے۔

یہ بھی پڑھیں:   ڈیجیٹل انقلاب اور جدت کیلئے ZONG 4G اور HUAWEI کا باہمی اشتراک

چیئرمین ایس ای سی پی فرخ سبزواری نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ نئے طریقہ کار کے تحت کمپنی میں خاتون ڈائریکٹر کا تقرر لازمی قرار دیا گیا ہے،

لسٹڈ کمپنیوں کی مشکوک سرگرمیوں پرنظر رکھ رہے ہیں، اسٹاک مارکیٹ میں بروکرز کے لیے دستاویز 30 سے کم کرکے 4 صفحات پر لائے ہیں، کاغذی کارروائی کم ہونے سے جلد ازجلد کمپنی تشکیل دی جاسکے گی۔

یہ بھی پڑھیں:   سود کا خاتمہ،خیبرپختونخوامیں بڑا کام ہوگیا

فرخ سبزواری نے کہا کہ ایس ای سی پی نے اپنی کارکردگی کا جائزہ لینے کیلئے ورلڈ بنک سے رجوع کیا اور اس سلسلے کو جاری رکھتے ہوئے کارپوریٹ سیکٹر میں شفافیت کے لیے عالمی بینک سے استفاده کریں گے۔