پڑوسی ممالک بغیر تحقیق پاکستان پر انگلیاں اٹھاتے ہیں، شاہ محمود قریشی

ملتان(بیورورپورٹ)وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ پڑوسی ممالک بنا تحقیق پاکستان پر انگلی اٹھا دیتے ہیں جب کہ پاکستان کو تنہا کرنے کی کوششیں کی جا رہی ہیں۔

ملتان میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ آنے والے دنوں میں مزید امتحان آنے ہیں، ہمارا ایک پڑوسی افغانستان اپنی ساری قباحتیں اور مشکلات پاکستان پر ڈالتا تھا،

عرصے سے وہاں جنگ جاری ہے، افغانستان کہتا تھا پاکستان سے دہشت گرد وہاں آ کر دہشت گردی کرتے ہیں، ایک پڑوسی ایران کا کہنا ہے کہ جنداللہ تحریک سے لوگ ایران میں آکر فساد کرتے ہیں، چین کہتا ہے کہ ای ٹی آئی ایم تنظیم چین آ کر کارروائیاں کرتی ہے،

یہ بھی پڑھیں:   وزیراعظم کا نیوزی لینڈ میں شہید نعیم راشد کیلیے قومی ایوارڈ کا اعلان

صورتحال یہ ہے کہ کوئی بھی بنا تحقیق پاکستان پر انگلی اٹھا دیتا ہے۔ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ مودی کی یہ سوچی سمجھی پالیسی ہے جو پاکستان کو تنہا کرنا چاہتا ہے

بھارت چاہتا ہے کہ پاکستان سفارتی طور پر تنہا ہو جائے، امریکا اب پاکستان کے بجائے بھارت کو اپنا اسڑیٹیجک اتحادی سمجھتاہے، بھارت نے بنگلادیش کا سہارا لے کر سارک کو یرغمال بنالیا، پاکستان کو تنہا کرنے کی کوششیں کی جا رہی ہیں۔وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ پاکستان کو گرے لسٹ میں ڈالا ہوا ہے سابق حکومت کے دور میں پاکستان گرے لسٹ میں آیا،

یہ بھی پڑھیں:   ٹوئٹر پر ”سے نو ٹو وار” ٹوئٹر ٹرینڈ بن گیا، بھارتی صحافیوں اور حکمرانوں نے بھی ٹیگ لگانا شروع کردئیے

ملک دوالیہ کے قریب پہنچ گیا، کئی ادارے دوالیہ ہو چکےہیں، ان حالت سے نکلنا ہے، اس مملکت کو رہتی دنیا تک قائم رہنا ہے تاہم بہت سے اتار چڑھاؤ آئے ہیں اور آتے جاتے رہیں گے۔وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ او آئی سی میں مہمان خصوصی بھارت کو بنایا گیا،

یہ بھی پڑھیں:   افغانستان میں امن کیلئےپاکستان اپنی کاوشیں جاری رکھےگا،شاہ محمود قریشی

افغانستان میں ایک ہزار ارب ڈالر خرچ ہو چکا ہے جب کہ 17 سال سے امریکا کہ فوج وہاں لڑ رہی ہے تاہم آج دوحہ میں امریکا اور طالبان مذاکرات کی میز پر بیٹھے ہیں۔