اسلام آباد ہائی کورٹ نے نواز شریف کی طبی بنیادوں پر ضمانت کی استدعا مسترد کردی

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) اسلام آباد ہائی کورٹ نے سابق وزیر اعظم نواز شریف کی طبی بنیادوں پر ضمانت کی استدعا مسترد کردی ۔نجی ٹی و ی کے مطابق نواز شریف نے طبی بنیادوں پر ضمانت کی استدعا کی تھی جس پر اسلام آباد ہائی کورٹ نے 20 فروری کو نواز شریف کی درخواست پر فیصلہ محفوظ کیا تھا ۔

یہ بھی پڑھیں:   پرویز الہی نے عوامی مسائل کو حکومت پر ترجیح دے دی

اسلام آباد ہائی کورٹ کے دو رکنی بنچ نے فیصلہ سنایا ۔ نیب نے بھی نواز شریف کو ضمانت پر رہا کرنے کی مخالفت کی تھی ۔ جیسے ہی فیصلہ سنایا گیا ن لیگ کے کارکنوں میں مایوسی پھیل گئی۔نجی ٹی وی کے مطابق شہبازشریف نے جناح ہسپتال میں اپنے بھائی نوازشریف کے ہمراہ فیصلہ سنا۔

یہ بھی پڑھیں:   جعلی اکاؤنٹس کیس: آصف علی زرداری اور فریال تالپور کے ضمانت قبل از گرفتاری کی درخواست دائر

واضح رہے کہ اس سے قبل احتساب عدالت نے نواز شریف کو العزیزیہ ریفرنس میں 7 سال قید کی سزا سنائی تھی ۔