بھارت میں خاتون نے اپنی 6 سالہ بھتیجی کو ذبح کرکے اس کا خون پی لیا

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارتی پولیس نے ایک خاتون کو گرفتار کیا ہے کہ جس نے مبینہ طور پر اپنی 6 سالہ بھتیجی کو ذبح کرکے اس کا خون پی لیا۔ تفصیلات کے مطابق بھارت کی ریاست آندرا پردیش کے ایک گاؤں میں خاتون نے اپنی بھابی سے نامعلوم وجوہات کی بنا پر ہونے والے جھگڑے کے نتیجے میں چھوٹی بہن کے سامنے چھ سالہ بچی کو ذبح کرکے اس کا خون پی لیا۔

یہ بھی پڑھیں:   سوئس کمپنی کی بنائی گئی واحد گھڑ ی، جانتے ہیں یہ کتنے ارب میں فروخت ہوئی؟

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ ومٹالا راسمو نامی 30 سالہ خاتون کے خلاف قتل کا مقدمہ درج کیا گیا ہے جو اپنے شوہر سے زبردستی اجازت لینے کے بعد اپنے بھائی کے گھر پر رہنے آئی تھی۔ بھارتی پولیس کا کہنا ہے کہ راسمو نے جھگڑے کے بعد اپنی چھ سالہ بھتیجی کو قتل کرنے کی دھمکی دی تھی لیکن مقتولہ کی ماں نے دھمکی کو سنجیدہ نہیں لیا۔

یہ بھی پڑھیں:   خفیہ شادی کرنا جائز قرار، سعودی عالم نے نیا فتوی جاری کر دیا

غیر ملکی میڈیا کا کہنا ہے کہ ملزمہ نے مبینہ طور پر تیز دھار چاقو سے ذبح کیا، بڑی کو قتل ہوتا دیکھ کر 4 سالہ سنڈیا نے ڈور کر گاؤں کے دیگر افراد کو اطلاع دی جس کے بعد گاؤں رہائشی دیگر افراد نے ملزمہ کو پکڑ کر درخت کے ساتھ باندھ کر پولیس کو مطلع کیا۔

یہ بھی پڑھیں:   چوتھی جماعت کا امتحان دینے والی 105 سالہ خاتون

پولیس نے خاتون کو گرفتار کرکے تھانے منتقل کردیا ہے جبکہ بہیمانہ قتل اور مقتولہ کا خون پینے کے واقعے کی تحقیقات کا آغاز کردیا ہے۔