نقیب قتل کیس میں مفرور ملزمان کو اشتہاری قراردینے کی کارروائی کا حکم

کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک)نقیب اللہ قتل کیس میںکراچی کی انسداد دہشت گردی عدالت نے مفرور 7 ملزمان کو اشتہاری قرار دینے کی کارروائی شروع کرنے کا حکم دیتےہوئے کیس کی مزید سماعت 9 فروری تک ملتوی کردی۔ کراچی کی انسداد دہشت گردی عدالت میں نقیب اللہ قتل کیس کی سماعت ہوئی۔سابق ایس ایس پی ملیر راؤ انوار سمیت دیگر ملزمان عدالت میں پیش ہوئے جب کہ کیس کے تفتیشی افسر ایس پی ڈاکٹر رضوان نے پیش ہو کر مفرور ملزمان کی گرفتاری سے متعلق عدالت کو آگاہ کیا۔ تفتیشی افسر نے بتایا کہ 7 مفرور ملزمان میں امان اللہ مروت، شعیب شوٹر، اظہر شامل ہیں جنہیں گرفتار کرنے کی کوشش کی مگر کامیابی نہیں ہوئی جب کہ اس حوالے سے ایف آئی اے اور آئی بی کو خطوط لکھے گئے ہیں۔
تفتیشی افسر نے مفرور ملزمان کو نوکری سے برطرفی کے احکامات عدالت میں پیش کیے اور بتایا کہ ملزمان کے شناختی کارڈ بلاک کرا دیے گئے ہیں۔
عدالت نے تفتیشی افسر سے استفسار کیا کہ مفرور ملزمان کو گرفتار کرنے کی سنجیدہ کوشش کی ہے یا بس خانہ پوری کی ہےجس پر ڈاکٹر رضوان نے کہا کہ ملزمان کی گرفتار کے لیے ہر ممکن کوشش کی۔عدالت نے 7 مفرور ملزمان کو اشتہاری قرار دینے کی کارروائی شروع کرنے کا حکم دیتے ہوئے تفتیشی افسر ڈاکٹر رضوان کا مفرور ملزمان سے متعلق بیان ریکارڈ کرلیا۔ کیس کی مزید سماعت 9 فروری تک ملتوی کردی گئی ہے۔

یہ بھی پڑھیں:   کوئٹہ میں دھماکہ

Related

اپنا تبصرہ بھیجیں