مافیا کا احتساب ضرور ہوگا، وزیراعظم عمران خان

لاہور: وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ بلیک میل نہیں ہوں گا اور احتساب ضرور ہوگا۔

وزیراعظم عمران خان نے لاہور میں انصاف ڈاکٹرز فورم کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان کورونا کے خلاف بڑی جنگ لڑ رہاہے، جون کے وسط میں اسپتالوں پر کورونا کیسز کا دباؤ تھا، ابھی بھی کورونا کی دوسری لہر کا خدشہ ہے، لاہور اور پشاور سمیت آلودگی والے شہروں میں وبا پھیلنے کا زیادہ خطرہ ہے، ڈاکٹرز دکھی لوگوں کی تکلیف دور کرتے ہیں، ان کا معاشرے میں ایک خاص مقام ہے۔

یہ بھی پڑھیں:   حکومت وہ آرمی چیف لانا چاہتی ہے جو اس کے ایجنڈے پر چلے، عمران خان

عمران خان نے کہا کہ والدہ کی بیماری میں علم ہوا کہ ملک کے اسپتالوں کا معیار نیچے جارہا ہے، بدقسمتی سے سرکاری اسپتال صرف غریبوں کیلئے مختص کردیے گئے، اسپتالوں میں اصلاحات سے ملک نے آگے جاناہے، ملک میں سزااور جزا کانظام ختم ہونے سے سسٹم نیچے چلا گیا، ماضی میں صحت اور تعلیم کے سرکاری اداروں کا معیار کم ہوتا گیا، ملک کے فیصلے کرنے والوں کو کھانسی آئی تو لندن چلے جاتے اور شعبہ صحت کی کوئی پرواہ نہ کی۔

یہ بھی پڑھیں:   مودی افغانستان میں اپنی خفیہ ایجنسی کی موجودگی سے مکر گئے

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ جس سسٹم میں سزا اور جزا نہیں ہوتی وہ تباہ ہوجاتاہے، چھوٹے چھوٹے مافیاز صحت کے شعبے میں اصلاحات نہیں آنے دیتے، تیس سال سے باریاں لینے والے آج اکٹھے ہیں، سارے جیب کترے اسٹیج پر کھڑے ہوکر شور مچاتے ہیں ملک تباہ ہوگیا، انہیں پہلی بار نظر آرہا ہے کہ ملک سے چوری اور غداری پر ان کا احتساب ہوگا۔

یہ بھی پڑھیں:   آئی ایم ایف نے ہمیں آڑے ہاتھوں لیا اور ناک سے لکیریں نکلوائیں، وزیراعظم

عمران خان نے کہا کہ مافیا کو پتہ ہے اب ایسا وزیراعظم آگیا ہے وہ جو مرضی کرلیں میں بلیک میل نہیں ہوں گا اور ان کا احتساب ضرور ہوگا، یہ ملک کے لیے فیصلہ کن وقت ہے، یہ ڈرے ہوئے ہیں تبدیلی سے ان کا زیادہ نقصان ہوگا اور انہوں نے تو جیلوں میں جانا ہے، مافیا کرپٹ سسٹم سے فائدہ اٹھاتا ہے وہ اصلاحات آرام سے تو نہیں ہونے دے گا۔