کورونا وائرس کے مزید 131 کیسز کی تصدیق، پاکستان میں تعداد 184 ہوگئی

Spread the love

کراچی: پاکستان کے لیے کورونا وائرس کے حوالے سے آج بدترین دن رہا اور مزید 131 افراد میں مہلک وائرس کی تشخیص ہوئی جس کے بعد ملک بھر میں متاثرہ افراد کی تعداد 184 تک جاپہنچی۔ آج تفتان سے سکھر آنے والے مزید 106، کراچی میں 8، خیبرپختونخوا میں 15 جبکہ حیدر آباد اور ملتان میں کورونا وائرس کا ایک ایک کیس سامنے آیا۔

سندھ میں کورونا وائرس کے آج مزید 115 کیسز کی تصدیق ہوئی جس کے بعد صوبے میں مجموعی تعداد 150 ہوگئی ہے۔ تفتان سے سکھر آنے والے مزید 106 زائرین میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی جس کے بعد اب تک متاثرہ زائرین کی تعداد 119 ہوگئی ہے جبکہ کراچی میں آج مزید 8 افراد میں مہلک وائرس کی تصدیق ہوئی جس کے بعد شہر میں متاثرہ افراد کی تعداد 30 تک جاپہنچی ہے۔ اس کے علاوہ حیدرآباد میں بھی ایک مریض کا کورونا وائرس کا ٹیسٹ مثبت آیا ہے۔

یہ بھی پڑھیں:   کورونا وائرس نے ایک دن میں 54 افراد کی جان لے لی

خیبر پختونخوا کے وزیر صحت تیمور سلیم جھگڑا نے تصدیق کی ہے کہ خیبر پختونخوا میں 15 کورونا سامنے آئے ہیں۔ سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر جاری بیان میں تیمور سلیم جھگڑا نے کہا کہ 19 افراد ایک ہفتہ قبل تفتان سے ڈیرہ اسماعیل خان پہنچے تھے جن میں سے 15 کے کورونا ٹیسٹ مثبت آئے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ متاثرہ افراد کو قرنطینہ میں رکھا گیا تھا۔

ملک کے سب سے زیادہ آبادی والے صوبے پنجاب کے شہر ملتان میں بھی ایک مریض میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی ہے۔ فوکل پرسن ڈاکٹر عطاالرحمان نے بھی ملتان کے نشتراسپتال میں داخل مریض میں کورونا وائرس کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ کورونا وائرس کا شکار 44 سالہ مریض لیہ کا رہائشی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ مریض تفتان سے ڈیرہ غازی خان کے کورونا کیئر سینٹر منتقل 800 افراد میں تھا جبکہ نشتر اسپتال میں زیر علاج 2 مریضوں کی رپورٹ آنا باقی ہے۔ ملتان کے شہری میں کورونا وائرس کی تصدیق کے بعد صوبے میں متاثرہ مریضوں کی تعداد 2 ہوگئی ہے۔ خیال رہے کہ گزشتہ روز لاہور میں بھی کورونا وائرس پہلا کیس رپورٹ ہوا تھا۔

یہ بھی پڑھیں:   مختلف شعبوں میں کارہائے نمایاں سرانجام دینے والے 127 شخصیات کو سول ایوارڈ دینے کی منظوری

سندھ حکومت کے ترجمان کا کہنا تھا کہ عوام سے احتیاط کی پرزور درخواست ہے، شہری غیر ضروری طور پر گھروں سے باہر نہ نکلیں، آپ کی حکومت کورونا وائرس کی وبا پر قابو پانے کی بھرپور کوشش کررہی ہے، ہمیں خوف زدہ ہونے کی ضرورت نہیں ہے۔ انہوں نےکہا کہ کورونا وائرس کا ابھی تک کوئی علاج سامنے نہیں آیا، یہ ایک صوبے یا ایک شہر کا مسئلہ نہیں ہے بلکہ سب کو مل کر کام کرنا چاہیے، ہم بار بار تفتان بارڈر پر اقدامات کا کہہ رہے تھے۔

یہ بھی پڑھیں:   کورونا وائرس: نریندرمودی نے ملک بھر میں کرفیو کا اعلان کردیا

صوبائی وزیر تعلیم نے میٹرک اور انٹر کے امتحانات کی نئی تاریخوں کا اعلان کردیا۔ سعید غنی نے بتایا کہ یکم جون سے 15 جون تک نویں دسویں کے علاوہ تمام کلاسوں کے امتحانات ہوں گے اور 15 جون کے بعد نئی کلاسیں شروع ہوں گی جب کہ 15 جون سے نویں اور دسویں کے امتحانات ہوں گے، یہ امتحانات 15 دن تک چلیں گے، امتحانات کے بعد 15 اگست 2020 کو دسویں جماعت کا نتیجہ جاری کیا جائے گا جس کے لیے بورڈ سے درخواست کی ہے۔

وزیر تعلیم نے کہا کہ 6 جولائی سے انٹر کے امتحانات ہوں گے، میٹرک اور انٹر کے امتحانات دوپہر کی شفٹ میں ہوں گے، بارہویں جماعت کے نتائج 15 ستمبر کو جاری ہوں گے، کالج میں گیارہویں اور بارہویں جماعت کا تعلیمی سال یکم اگست 2020 سے شروع ہوگا

8 تبصرے “کورونا وائرس کے مزید 131 کیسز کی تصدیق، پاکستان میں تعداد 184 ہوگئی

  1. Pingback: UNICC.CM
  2. Pingback: DevOps Services
  3. Pingback: Matthew Erausquin
  4. Pingback: pasar qq

تبصرے بند ہیں