لاہور:وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدارسے بلوچستان کے وزیراعلیٰ جام کمال خان کی قیادت میں وفد کی ملاقات

Spread the love

ملاقات میں باہمی دلچسپی کے امور،پنجاب اور بلوچستان کے مابین مختلف شعبوں میں تعاون بڑھانے اور بین الصوبائی ہم آہنگی کے فروغ کیلئے اقدامات پر تبادلہ خیال۔دونوں وزرائے اعلیٰ کا نئے سال میں نئے جذبے اور عزم کے ساتھ عوام کی خدمت کے عزم کا اعادہ-وامی خدمت کی راہ میں حائل ہونے والی رکاوٹوں کا ملکر مقابلہ کریں گے-دونوں وزرائے اعلیٰ کا اتفاق.سازشیں کرنے والے پہلے بھی ناکام اور بے مرادرہے او رآئندہ بھی ایسے عناصر کو کامیابی نہیں ملے گی-
تنقید کرنے والے عناصر پاکستان کی ترقی اور عوام کی خوشحالی سے خائف ہیں.ترقی اور خوشحالی کے سفر میں دونوں صوبے قدم سے قدم ملا کر آگے بڑھیں گے.پنجاب حکومت بلوچستان کی ترقی اور عوام کی خوشحالی کیلئے ہر ممکن تعاون جاری رکھے گی۔نئے پاکستان کی تعمیر و ترقی کے سفر میں شانہ بشانہ چلیں گے۔بلوچستان کے عوام کی ترقی و خوشحالی اسی طرح عزیز ہے جس طرح پنجاب کے عوام کی .بلوچستان کے طلبا و طالبات کیلئے پنجاب کے تعلیمی اداروں میں خصوصی کوٹہ مقرر کیا گیا ہے۔لوچستان کے طلبا و طالبات کو اعلیٰ تعلیم کیلئے وظائف فراہم کئے گئے ہیں۔بلوچستان کے عوام کیلئے پنجاب حکومت کوئٹہ میں 2ارب روپے کی لاگت سےدل کاہسپتال بنائے گیپنجاب او ربلوچستان کے درمیان مواصلاتی رابطوں کو بہتر بنایا جائے گا-
بلوچ بہن بھائیوں کی جو بھی خدمت ہو گی پنجاب پیچھے نہیں رہے گا-
اوکاڑہ میں میر چاکر اعظم رند کے مقبرے کی اصل حالت میں بحالی کا کام تیزی سے جاری ہے –
میر چاکر اعظم رند کے مقبرے کی تزئین و آرائش کے لئے ترجیحی بنیادوں پر فنڈز فراہم کئے گئے ہیں –
ہماری خوشیاں اور دکھ سانجھے ہیں۔
بلوچستان کو ماضی میں نظرانداز کیا گیا۔
تحریک انصاف کی حکومت بلوچستان کی ترقی اور خوشحالی کیلئے پرعزم ہے۔ عثمان بزدار
نئے پاکستان کی تعمیر و ترقی کیلئے مل کر کام کر رہے ہیں اور کرتے رہیں گے -عثمان بزدار
عام آدمی کو پاکستان میں وہی سہولتیں دیں گے جو امیر کو ملتی ہیں -عثمان بزدار
راجن پور او رڈیرہ غازی خان کے قبائلی علاقوں میں پانی ذخیرہ کرنے کیلئے ڈیمز بنانے کے منصوبے پر کام شروع کردیا گیاہے-عثمان بزدار
ان ڈیمز کی تعمیر سے ضائع ہونے والے پانی کو محفوظ کیا جا سکے گا-عثمان بزدار
ہم نے مل کرنیا پاکستان بناناہے -عثمان بزدار
نئے پاکستان میں بلوچستان کا کردار کلیدی اہمیت رکھتا ہے۔عثمان بزدار
دونوں وزرائے اعلیٰ کی مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کی بربریت اورمودی سرکار کے متنازعہ شہریت کے قانون کی شدید مذمت۔
وزرائے اعلیٰ کا مظلوم کشمیری عوام کے ساتھ مکمل یکجہتی کا اظہار۔
مودی سرکار کے غیر قانونی، غیر آئینی اورغیر جمہوری ہتھکنڈوں کو مسترد کرتے ہیں – عثمان بزدار
کشمیر اور پاکستان کا رشتہ ازل سے ہے اور ابد تک رہے گا۔ عثمان بزدار
دنیا کی کوئی طاقت کشمیر اور پاکستان کو جدا نہیں کر سکتی۔ عثمان بزدار
فاشسٹ مودی نے متنازعہ شہریت کے قانون کے ذریعے اپنا گڑھا خود کھودا ہے۔ عثمان بزدار
معصوم کشمیری عوام اپنی جدوجہد میں تنہا نہیں۔ وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان
کشمیری عوام کے ساتھ کھڑے رہیں گے۔ جام کمال خان
پنجاب اوربلوچستان کے لوگ محبت کی کڑی سے جڑے ہیں۔جام کمال خان
پاکستان ہم سب کا سانجھا ملک ہے۔ جام کمال خان
صوبوں میں ہم آہنگی اوریکجہتی کو فروغ دینے کیلئے مثبت کردارجاری رکھیں گے۔جام کمال خان
وفد میں سینیٹر انوار الحق کاکڑ،بلوچستان کے وزیرداخلہ میر ضیا لانگو،وزیرتعلیم محمد بخش لہڑی،وزیرریونیو سلیم کھوسہ اوردیگر شامل تھے-
صوبائی وزیر اطلاعات فیاض الحسن چوہا ن بھی اس موقع پر موجود تھے

یہ بھی پڑھیں:   نیب نے سپیکر سندھ اسمبلی آغا سراج درانی کو گرفتار کرلیا