اورنج لائن میٹروٹرین کے منصوبے کا فزیکل انفراسٹرکچر مکمل

Spread the love

لاہور : اورنج لائن میٹروٹرین کے منصوبے کا فزیکل انفراسٹرکچر مکمل کرلیاگیا ہے اوراورنج لائن میٹروٹرین کوپہلی باربجلی سے پورے روٹ پر10دسمبر کو آزمائشی طورپر چلایا جائے گا۔وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے اورنج لائن میٹروٹرین کے آزمائشی ٹرائل کی منظوری دے دی ہے۔

اورنج لائن میٹروٹرین کاڈیرہ گجراں سے علی ٹاؤن تک ٹرائل رن کیا جائے گا اورعلی ٹاؤن کے آخری سٹیشن پر ٹرائل رن کے حوال سے تقریب کاانعقاد کیاجائے گا- لاہور اورنج لائن میٹروٹرین کوڈیرہ گجراں سے پہلی بار بجلی سے آزمائشی طو رپر چلایا جائے گا اور ٹرین کا آزمائشی سفر علی ٹاؤن پراختتام پذیر ہوگا۔ وزیراعلیٰ عثمان بزدار کی زیر صدارت وزیراعلیٰ آفس میں اعلی سطح کا اجلاس ہوا۔وزیراعلیٰ کو سیکرٹری ٹرانسپورٹ نے اورنج لائن میٹروٹرین کے آزمائشی ٹرائل کے حوالے سے بریفنگ دی۔

یہ بھی پڑھیں:   ن لیگ کی جانب سے لیا گیا 1 ارب ڈالر کا قرض تحریک انصاف حکومت نے واپس کر دیا

وزیراعلیٰ نے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ 10دسمبر کو ٹرین کو پورے روٹ پرپہلی بار بجلی سے چلانے کا آزمائشی ٹرائل کیا جائے گا۔وزیراعلیٰ نے ہدایت کی کہ ٹرین کے روٹ کے نیچے سڑکوں کی تعمیر ومرمت کا کام جلد مکمل کیا جائے اورٹریفک کے مسائل کو بھی فی الفور حل کرنے کیلئے اقدامات کیے جائیں اورعوام کی مشکلات کے ازالے کیلئے ٹریفک مینجمنٹ پر بھرپور توجہ دی جائے۔

یہ بھی پڑھیں:   سپریم کورٹ نے نجی چینلز پر بھارتی مواد نشر کرنے سے روک دیا

صوبائی وزیر ٹرانسپورٹ جہانزیب خان کھچی،ایم ڈی پنجاب ماس ٹرانزٹ اتھارٹی،سیکرٹری ٹرانسپورٹ،کمشنر لاہور ڈویژن، ڈی آئی جی آپریشنز، سیکرٹری اطلاعات، سپیشل مانیٹرنگ یونٹ کے سربراہ اور متعلقہ حکام نے اجلاس میں شرکت کی۔وزیر اعلیٰ پنجاب سردار عثمان سے آج وزیراعلیٰ آفس میں وزیر مملکت برائے موسمیاتی تغیرات زرتاج گل نے ملاقات کی،جس میں سموگ سے نمٹنے اورماحولیاتی آلودگی پرقابوپانے کیلئے کئے جانے والے اقدامات اورمستقبل کی حکمت عملی پر تبادلہ خیال کیاگیا۔وزیراعلیٰ نے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ماضی کی حکومتوں نے کرپشن اوراقرباء پروری کرکے سیاسی آلودگی بھی بڑھائی اوربے ہنگم عمارتیں کھڑی کر کے فضائی آلودگی میں بھی اضافہ کیا۔

یہ بھی پڑھیں:   وفاقی حکومت کے آرمی ایکٹ میں ترمیم کیلئے سیاسی رابطے شروع

سابق ادوار کی غلط پالیسیوں کے باعث آج ہمارے شہر آلودہ ہیں۔ہماری حکومت ماضی کی سیاسی کثافتوں کو بھی صاف کرے گی اورماحولیاتی کثافتوں کو بھی۔ انہوں نے کہا کہ لاہور میں 60ہزار کینال پر اربن فارسٹ سٹیشن لگائے جائیں گے۔ اینٹوں کے بھٹوں اورسٹیل رولنگ انڈسٹریز کو زگ زیگ ٹیکنالوجی پر منتقل کیا جارہا ہے۔2020ء تک بھٹے اورسٹیل انڈسٹریز کو نئی ٹیکنالوجی پر منتقل ہونے کی ڈیڈ لائن دے دی گئی ہے۔انہوں نے کہا کہ ماحولیاتی آلودگی اورسموگ پر قابو پانے کیلئے مہم کو مزید تیز کیاگیا ہے۔