بھارت اور پاکستان کے درمیان ایٹمی جنگ ہوئی تو برطانیہ کو کتنا نقصان ہوسکتا ہے ؟

Spread the love

لندن : اقوام متحدہ میں برطانیہ کے سابق سفیر نے تنازعہ کشمیر پر پاکستان اور بھارت کے درمیان جنگ کے حقیقی خطرے سے خبردارکرتے ہوئے عالمی برادری پر زوردیاہے کہ وہ تنازعہ کشمیر کے حل میں مدد کرے یامستقبل میں جوہری جنگ کی صورت میں بھاری قیمت ادا کرنے کے لیے تیا ررہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق سابق سفارتکار Sir Mark Lyall Grant نے ایک مضمون میں کہاکہ بھارت اور پاکستان کے درمیان جوہری جنگ سے برطانیہ کو 20ارب پائونڈ کا نقصان ہوسکتا ہے۔انہوں نے کہاکہ جنگ سے برطانیہ پر بھی اثرات ہونگے اور اس بحران کو حل کرانے کے لیے ہماری خصوصی ذمہ داری ہے۔تنازعہ کشمیر پر بھارت اور پاکستان کے درمیان کشیدگی میں اضافہ ہورہا ہے

یہ بھی پڑھیں:   افغان دارالحکومت کابل میں دھماکہ،4 افراد ہلاک ، 90 زخمی

جس سے پورے برصغیر کی سلامتی خطرے سے دوچارہے۔امریکی جریدے فوربز میں شائع ہونے والے مضمون میں سرمارک لیال نے خبردارکیا کہ بڑھتی ہوئی کشیدگی فوجی تصادم کا رخ اختیارکرسکتی ہے جس سے بر طانیہ کو 20ارب پائونڈ کا نقصان اٹھانا پڑ سکتا ہے۔انہوں نے کہاکہ بھات کے حالیہ اقدامات سے یقیناً مسلم اکثریتی علاقے جموںو کشمیر میں مایوسی اور انتہا پسندی میں اضافہ ہوگا۔

یہ بھی پڑھیں:   مسلمانوں کیخلاف شہریت ترمیمی بل کی منظوری،مودی سرکار پریشان-

انہوںنے کہا کہ تنازعہ کشمیر کوحل کرانے کے لیے برطانیہ کی خاص ذمہ داری ہے کیوں کہ 1947ء میں تقسیم برصغیر کے وقت برطانیہ کشمیر کے حوالے سے اختلافات کو دور کرانے میں ناکام ہوگیا تھاجو پاکستان اور بھارت کے درمیان کشیدگی کی بنیادی وجہ ہے۔