ملک بھر میں پٹرول کی شدید قلت جگہ جگہ دھرنے عوام کو بھاری پڑ گئے

Spread the love

کراچی : جمعیت علمائے اسلام(ف)کے آزادی مارچ کے پلان بی کے تحت اہم شاہراہوں پر دھرنوں کا سلسلہ جاری ہے جس کے باعث ملک بھر میں پیٹرول کی قلت پیدا ہونے کا خدشہ پیدا ہوگیا ہے۔

آل پاکستان آئل ٹینکرز ایسوسی ایشن نے خبردار کیا ہے کہ جمعیت علمائے اسلام (ف) کے احتجاج کے باعث کراچی ایکسپریس وے بند ہوئی تو آئل ٹینکرز کی ترسیل متاثر ہوگی، ملک بھر میں پیٹرول کی یومیہ کھپت 2 کروڑ لیٹر ہے۔ایسوسی ایشن کے مطابق سڑکوں کی بندش سے ڈپوز سے بھی پیٹرول کی ترسیل نہیں ہوگی۔

یہ بھی پڑھیں:   بیٹی کو بچاتے کتے کا شکار ہونے والے باپ کو ویکسین نہ ملی 6بچوں کا باپ اور حاملہ بیوی کاواحد کفیل شوہر کئی روز تک زندگی و موت کی کشمکش میں رہنے والازندگی کی بازی ہار گیا

آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی کے مطابق ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کیلئے پیٹرول کا 20 دن کا ذخیرہ ہونا ضروری ہے۔کراچی میں اچانک بڑی تبدیلی نظر آنے لگی۔

شہر کی اہم شاہراہوں پر روز دکھائی دینے والی تجاوزات غائب ہوگئیں۔ مصروف ترین صدر کے علاقے میں خود پولیس والے بھی ٹھیلے اور پتھارے داروں کو بھگاتے نظر آئے۔

یہ بھی پڑھیں:   339 کلومیٹر طویل نئی موٹر وے کی منظوری دے دی گئی