مودی سرکار کا جنوب مشرقی ایشیائی ممالک کی تنظیم آسیان سے معاشی معاہدے سے انکار

بینکاک : بھارت جنوب مشرقی ایشیائی ممالک کی تنظیم سے بھی ہاتھ کر گیا، آسیان ممالک سے علاقائی معاشی معاہدے سے انکار کر دیا۔میڈیارپورٹس کے مطابق تھائی لینڈ میں ہونے والے سربراہ اجلاس میں بھارت نے شرکت کی، نریندر مودی نے خطاب بھی کیا لیکن جب آسیان ممالک اور چین کیساتھ معاشی معاہدے میں شامل ہونے کی باری آئی تو بھارت نے صاف انکار کر دیا۔

یہ بھی پڑھیں:   حکومت نے ٹیکس اکٹھا کرنے کیلئے نیا پلان بنا لیا

بنکاک میں بھارتی وزرات خارجہ کے اہلکاروں نے معاہدے میں شامل نہ ہونے کا اعلان کیا۔مجوزہ معاہدے کے تحت آسیان تنظیم کے رکن 15 ممالک کے درمیان باہمی تجارت کو وسعت ملے گی اور ایک دوسرے کو ٹیکس میں چھوٹ جیسی مراعات دی جائیں گی، سربراہ اجلاس میں رکن ممالک کے سربراہان نے علاقائی تجارتی معاہدے پر اتفاق کیا۔ آئندہ سال بھارت کے بغیر ہی یہ ممالک معاہدے پر دستخط کریں گے۔

یہ بھی پڑھیں:   ملک میں بجلی کی پیداواری استعداد 35 ہزار 924 میگاواٹ ہے، وزارت توانائی