آرمی چیف اور وزیر اعظم کے درمیان ناراضی؟ اس سوال پر وفاقی وزیر فیصل واوڈا کا کوئی جواب نہیں

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)نجی ٹی وی پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے سینئر صحافی حامد میر نے کہا کہ افواہیں سننے کو مل رہی ہیں کہ آرمی چیف اور وزیر اعظم کی آپس میں کوئی ناراضی چل رہی ہے یا ان کے درمیان کوئی ایشو ہے۔ اس سوال پر وفاقی وزیر فیصل واوڈا نے تو چپ سادھ لی مگر محمدمالک نے جواب دیا کہ نہیں اس کی کوئی مصدقہ اطلاع تو نہیں ہے مگر افواہیں ضرور ہیں۔تاہم میرا خیال ہے کہ عمران خان کو پنجاب میں فوکس اس بات پر نہیں رکھنا چاہیے کہ بزدار حکومت کیسی چل رہی ہے بلکہ وہ یہ دیکھیں کہ صوبے کا نظام کیسا چل رہا ہے کیونکہ اگلا الیکشن پی ٹی آئی کو پنجاب کی بنیاد پر ہی لڑنا ہو گا۔پروگرام میں آگے جا کر فیصل واوڈا نے کاغذات کی گٹھٹری دکھاتے ہوئے کہا کہ اپوزیشن کے خلاف یہ سب ثبوت ہیں کیا اس کے باوجود بھی وہ بچ سکتے ہیں۔اپوزیشن کبھی بھی اپنے خلاف مقدمات سے بری نہیں ہو سکتی۔جب حامد میر نے سوال کیا کہ کیا این آر او ہو گا یا نہیں تو اس پر فیصل واوڈا نے جواب دیا کہ کسی صورت این آر او نہیں ملےگا ۔سینئر صحافی محمد مالک نے اس سوال کا جوب دیتے ہوئے کہا کہ چند ماہ پہلے تک این آر او ملنے کی نوید تھی مگر اب جو صورت حال بن چکی ہے میری اطلاعات کے مطابق این آر او اب نہیں ہو گا، پہلے ہو جاناتھا اگر ہوتا مگر اب نہیں۔

یہ بھی پڑھیں:   افضل کوہستانی کے بھائی نے اپنے بھائی کے قتل کی تحقیقات کے لیے جوڈیشل کمیشن بنانے کا مطالبہ کردیا