عمران خان کا گیس چوری کے خلاف ملک گیر کریک ڈاؤن کا حکم

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)وزیر اعظم عمران خان نے گیس چوری کے خلاف ملک بھر میں کریک ڈاؤن کا حکم دیتے ہوئے کہا ہے کہ اس حوالے سے کوئی نرمی یا رعایت نہ برتی جائے۔تفصیلات کے مطابق وزیرِاعظم عمران خان کی زیر صدارت گیس سیکٹر سے متعلقہ معاملات کا جائزہ لینے کے لیے اعلیٰ سطح اجلاس منعقد ہوا

جس میں وزیرِ خزانہ اسد عمر، وزیرِ اطلاعات فواد چوہدری، وزیرِ پٹرولیم غلام سرور خان، مشیر تجارت عبدالرزاق داوٴد اور سوئی سدرن اورناردرن کمپنیز کے منیجنگ ڈائریکٹرز و دیگر افسران نے شرکت کی۔

یہ بھی پڑھیں:   جوڈیشل کمیشن بنانے سے متعلق حکومت سے اقدامات کی تفصیلات طلب

اجلاس میں وزیراعظم عمران خان کو بریفنگ میں بتایا گیا کہ اس وقت تقریباً 50 ارب روپے کی گیس چوری کا سامنا ہے اور اس چوری شدہ یا ضائع شدہ گیس کا بوجھ بھی صارفین پر ڈالا جاتا ہے۔

بریفنگ میں گیس بلوں میں اضافے کی شکایت اور سال 2019ء اور سال 2020ء میں گیس کی ضروریات کو پورا کرنے کے لیے لائحہ عمل کے حوالے سے بھی آگاہ کیا گیا

یہ بھی پڑھیں:   آزاد کشمیر میں زلزلے کے آفٹر شاکس، جاں بحق افراد کی تعداد 37 ہوگئی

جب کہ وزیراعظم کو گیس کی دریافت کے حوالے سے کیے جانے والے اقدامات اور اس حوالے سے متعلقہ کمپنیوں کو دی جانے والی سہولیات اورمراعات پر بھی بریفنگ دی گئی۔

اجلاس میں آنے والے مہینوں میں بجلی اور دیگر سیکٹر کے لیے گیس کی ضروریات کو مد نظر رکھتے ہوئے فوری طور پر 200 ایم ایم سی ایف ڈی گیس مزید منگوانے کا فیصلہ کیا گیا۔

یہ بھی پڑھیں:   قطر نے ایک لاکھ پاکستانیوں کو روزگار فراہم کرنے کی درخواست منظور کرلی

اس موقع پر وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ یو ایف جی گیس کی روک تھام کے حوالے سے کسی قسم کی کوئی نرمی یا رعایت اختیار نہ کی جائے اور گیس چوروں کے خلاف ملک بھر میں کریک ڈاؤن کیا جائے۔

Related