وزیر اعلیٰ پنجاب کو پہلے ہی سانحہ ساہیوال کے لواحقین سے مل لینا چاہئے تھا،افتخار درانی

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) وزیر اعظم کے ترجمان افتخار درانی نے کہا ہے کہ وزیر اعلیٰ پنجاب کو پہلے ہی سانحہ ساہیوال کے لواحقین سے مل لینا چاہئے تھا ، یہ مسئلہ پہلے ہی حل ہو جاناچاہئے تھا، وزیر اعظم کا اس بات پر اتفاق ہے کہ سانحہ ساہیوال کے لواحقین کو مطمئن کیا جائے گا۔
نجی ٹی وی کے پروگرام میں گفتگوکرتے ہوئے افتخار درانی نے کہا کہ 2013میں ہم نے دھرنا نہیں دیا ہوا تھا لیکن اس وقت نواز شریف اور شہباز شریف سڑکوں پر گھسیٹ رہے تھے اور پیٹ پھاڑ رہے تھے ، اس سے قبل ن لیگ والے بے نظیربھٹو اورذوالفقار علی بھٹو کے بارے میں کیا زبان استعمال کرتے رہے ہیں ؟ ہم تو ان سے بہت بہتر اور اچھی گفتگو کررہے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں:   سری لنکا میں 8 دھماکے، ہلاکتوں کی تعداد 290 تک پہنچ گئی

ان کا کہناتھا کہ وزیر اعظم کا اس بات پر اتفاق ہے کہ سانحہ ساہیوال کے لواحقین کو مطمئن کیا جائے گا اور انصاف ہوتا ہو انظر آئے گا ،وزیر اعلیٰ پنجاب کو پہلے ہی سانحہ ساہیوال کے لواحقین سے مل لینا چاہئے تھا ، یہ مسئلہ پہلے ہی حل ہو جاناچاہئے تھا ۔

یہ بھی پڑھیں:   اقوام متحدہ اور حکومت پاکستان کا ملکی تاریخ میں پہلی بار نوجوانوں سے متعلق قومی سروے کرانے کا فیصلہ

Related