شام میں شدید سردی کی وجہ سے کم از کم انتیس بچے ہلاک

Spread the love

نیویارک(این این آئی)اقوام متحدہ کے مطابق شامی علاقے الحول میں گزشتہ دو ماہ کے دوران شدید سردی کی وجہ سے کم از کم انتیس بچے ہلاک ہو گئے ۔ دیر الزور کے تقریبا تئیس ہزار افراد لڑائی سے فرارہو کر الحول کے عارضی کمیپوں میں پناہ لیے ہوئے ہیں،

یہ بھی پڑھیں:   میچ دیکھنے کیلئے جانے والے افغان شہری کو بھارت میں حیرت انگیز مشکلات کا سامنا

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے مطابق شام میں خانہ جنگی کی وجہ سے داخلی سطح پر بے گھر ہونے والوں کے حالات پریشان کن ہیں۔ دیر الزور کے تقریبا تئیس ہزار افراد لڑائی سے فرارہو کر الحول کے عارضی کمیپوں میں پناہ لیے ہوئے ہیں۔

ان پناہ گزینوں کو شدید سردی کے ساتھ ساتھ طبی سہولیات کی بھی کمی کا سامنا ہے۔

یہ بھی پڑھیں:   جمال خاشقجی نے ملائیشین وزیراعظم کے انٹرویو کے عوض کتنی رقم لی تھی؟

Related

47 تبصرے “شام میں شدید سردی کی وجہ سے کم از کم انتیس بچے ہلاک

اپنا تبصرہ بھیجیں