پاکپتن دربار اراضی کیس؛ نواز شریف کو ذمہ دار قرار

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) پاکپتن دربار اراضی کیس میں جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم (جے آئی ٹی) نے نواز شریف کو ذمہ دار قرار دے دیا۔سپریم کورٹ میں پاکپتن دربار اراضی الاٹمنٹ کیس کی سماعت ہوئی تو معاملے کی تحقیقات کرنے والی جے آئی ٹی نے زمین منتقل کرنے کے احکامات میں نواز شریف کو ذمہ دار قرار دے دیا۔سپریم کورٹ نے جے آئی ٹی رپورٹ پر نواز شریف سے دو ہفتوں میں جواب طلب کرلیا ہے۔ عدالت نے پنجاب حکومت کو بھی اپنا جواب جمع کرانے کا حکم دیا ہے۔دوران سماعت چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ زمین کی الاٹ منٹ کس نے کی تھی؟۔ جس پر سربراہ جے آئی ٹی نے بتایا کہ زمین الاٹمنٹ اس وقت کے وزیراعلی پنجاب نواز شریف نے کی تھی۔ چیف جسٹس نے کہا کہ نواز شریف کدھر ہیں، انہوں نے کس اختیار کے تحت زمین الاٹ کر دی؟۔ نواز شریف کے وکیل نے کہا کہ ان کے موکل نے زمین الاٹمنٹ کی تردید کی ہے۔چیف جسٹس نے کہا کہ اب تو انکوائری رپورٹ آ چکی ہے، ٹرائل کورٹ میں جرح ہوئی تو نواز شریف کے لیے بہت مشکل ہوگی۔ جے آئی ٹی سربراہ نے بتایا کہ نواز شریف کے سابق سیکرٹری 75 سال کے ضعیف شخص ہیں اور انہوں نے بھی تسلیم کیا ہے کہ وزیر اعلی نے زمین الاٹ کرنے کے احکامات دیے تھے۔

یہ بھی پڑھیں:   یکم اکتوبر سے پیٹرول کتنا سستا ہو گا؟ عوام کیلئے شاندار خبر آگئی

Related

اپنا تبصرہ بھیجیں