‎نوازشریف کی جیل میں طبیعت خراب، اسپتال لے جانے کی تیاریاں

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) سابق وزیراعظم نواز شریف کی صاحبزادی مریم نواز کا کہنا ہے کہ ‎نواز شریف کی طبیعت ٹھیک نہیں ہے اور انہیں کل پاکستان انسٹیٹیوٹ آف کارڈیالوجی لے جایا جارہا ہے۔ سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر اپنے ٹویٹ میں مریم نواز نے کہا کہ میں پہلے کہہ چکی ہوں کہ میاں نواز شریف کی طبیعت ٹھیک نہیں ہے اور انہیں کل پاکستان انسٹیٹیوٹ آف کارڈیالوجی لے جایا جارہا ہے لیکن مجھے اور ہماری فیملی کو اس حوالے سے آگاہ تک نہیں کیا گیا۔ مریم نواز نے کہا کہ میڈیکل بورڈ کی جانب سے پیش کی جانے والی رپورٹس بھی ابھی تک نہیں دکھائی گئیں تاہم نواز شریف کی رپورٹس سے متعلق وزارت داخلہ کو لکھا ہے۔
دوسری جانب نواز شریف کے ذاتی معالج ڈاکٹر عدنان نے بھی پنجاب کے ایڈیشنل سیکریٹری داخلہ، آئی جی جیل خانہ جات اور سیکریٹری صحت کو خط لکھ دیا ہے۔ خط میں کہا گیا ہے کہ نواز شریف کی صحت فوری ایکشن لینے کی متقاضی ہے اگر بروقت اقدامات نہیں کئے گئے تو مریض کی صحت کو خطرات لاحق ہو سکتے ہیں۔ اپوزیشن لیڈر قومی اسمبلی شہباز شریف نے بھی نواز شریف کی صحت کے معاملے پر تشویش کا اظہار کیا ہے۔ شہباز شریف کا کہنا ہے کہ نواز شریف کی جیل میں طبیعت کی خرابی اور انہیں جیل سے اسپتال منتقل کرنے کی اطلاعات ملی ہیں جن پر سخت تشویش ہے۔ جیل حکام کی جانب سے نواز شریف کا طبی معائنہ کرنے والے میڈیکل بورڈز کی رپورٹس ان کے اہل خانہ اور ذاتی معالجین کو فی الفور فراہم کی جائیں۔

یہ بھی پڑھیں:   پی آئی اے کا طیارہ حادثے کا شکار ہوگیا

Related

اپنا تبصرہ بھیجیں