پولیس نے ہمارے ماما پاپا کو مار دیا ،بچوں کی میڈیا سے گفتگو

ساہیوال (مانیٹرنگ ڈیسک)ساہیوال میں پولیس کی فائرنگ کے واقعہ کے بارے میں عینی شاہدین کا کہنا ہے فائرنگ کا نشانہ بنانے والی گاڑی لاہور کی جانب سے آرہی تھی، جسے ایلیٹ فورس کی گاڑی نے روکا اور فائرنگ کردی جبکہ گاڑی کے اندر سے کوئی مزاحمت نہیں کی گئی۔ عینی شاہدین کے مطابق مرنے والی خواتین کی عمریں 40 سال اور 13 برس کے لگ بھگ تھیں۔ عینی شاہدین نے مزید بتایا کہ گاڑی میں کپڑوں سے بھرے تین بیگ بھی موجود تھے، جنہیں پولیس اپنے ساتھ لے گئی۔ عینی شاہدین کے مطابق بازیاب ہونے والوں میں 2بچیاں اور ایک بچہ شامل ہے۔ عینی شاہدین کے مطابق فائرنگ کے واقعے کے بعد پولیس نے کار میں سوار بچوں کو قریبی پیٹرول پمپ پر چھوڑ دیا، جہاں انہوں نے بتایا کہ ان کے والدین کو مار دیا گیا ہے۔ عینی شاہدین کے مطابق تھوڑی دیر بعد ہی سی ٹی ڈی پولیس بچوں کو اپنے ساتھ موبائل میں بٹھا کر نامعلوم مقام پر لے گئی، جن میں سے ایک بچہ فائرنگ سے معمولی زخمی ہوا۔

یہ بھی پڑھیں:   خطے میں امن کے لیے پاکستان کی حمایت کر تے ہیں، چین نے اہم اعلان کردیا

Related

اپنا تبصرہ بھیجیں